پاکستان اور ایران باہمی تجارت کے فروغ میں حائل تمام تصفیہ طلب امور حل کرنے پر متفق

پاکستان اور ایران باہمی تجارت کے فروغ میں حائل تمام تصفیہ طلب امور حل کرنے پر متفق

پاکستان اورایران نے باہمی تجارت کے فروغ کی راہ میں حائل تمام تصفیہ طلب امور حل کرنے پراتفاق کیاہے۔اس عزم کااظہاراسلام آباد میں پاک ایران مشترکہ تجارتی کمیٹی کے آٹھویں اجلاس کی اختتامی نشست میں کیاگیا۔ایران کے صنعتوں، کان کنی اورتجارت کے وزیررضارحمانی کی قیادت میں ایک وفد نے تجارت، ٹیکسٹائل، صنعتوں ،پیداوار اورسرمایہ کاری کے بارے میں وزیراعظم کے مشیر عبدالرزاق دائود سے اجلاس کی اختتامی نشست میں ملاقات کی جس میں دونوں ملکوں کے درمیان باہمی تعاون کے شعبوں پراتفاق رائے ہوا۔مشیرتجارت نے اس موقع پردونوں ملکوں کے باہمی تجارتی تعلقات کے فروغ کے لئے مکمل تعاون کی یقین دہانی کرائی۔انہوں نے کہاکہ اسلام آباد میں پاکستان کے تجارت کے فروغ کے ادارے میں ایک اہم ڈیسک قائم کیاجائے گا جو اس حوالے سے متعلقہ مسائل فوری طورپرحل کرے گا۔ایران کے وزیرنے دوطرفہ تعاون میں اضافے کے لئے اپنے ملک میں بھی ایسے ہی اقدام کا عزم ظاہر کیا۔انہوں نے باہمی تجارت کے امورپرمشیرتجارت کے موقف کی تعریف کرتے ہوئے پاکستان کے ساتھ تجارت بڑھانے کی کوششوں پراتفاق کیا۔

یہ خبر پڑھیئے

یوکرین کی صورتحال پر سلامتی کونسل کا اجلاس

مقامی وقت کے مطابق 8 تاریخ کو اقوام متحدہ میں روس کے مستقل مشن کی …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons