برطانوی اخبار کا شہباز شریف پر فنڈز خردبرد کا الزام، برطانوی ادارے کی تردید

برطانوی اخبار کا شہباز شریف پر فنڈز خردبرد کا الزام، برطانوی ادارے کی تردید

برطانوی اخبار ڈیلی میل نے سابق وزیر اعلیٰ پنجاب شہباز شریف کو زلزلہ زدگان کی امداد کے لئے دیے جانے والے فنڈ میں خردبرد اور شریف خاندان پر اس کی منی لانڈرنگ کا الزام عائد کردیا، تاہم فنڈ فراہم کرنے والے برطانوی ادارے نے اس کی تردید کر دی ہے-

برطانوی اخبار نے اپنی خبر میں ڈی ایف آئی ڈی سے سوال کیا کہ شہباز شریف اور ان کے اہل خانہ نے زلزلہ زدگان کو دیے گئے پیسوں کی منی لانڈرنگ کی جس پر ڈی آئی ڈی نے اپنا رد عمل دیتے ہوئے کہا کہ ‘ ہمیں ہمارے نظام پر بھروسہ ہے کہ برطانیہ کے ٹیکس دہندگان فراڈ کا شکار نہیں ہوا اور ان کا پیسہ معزز کام میں استعمال ہوا۔’ یہاں یہ بات قابل غور ہے کہ برطانوی ویب سائٹ ڈیلی میل برطانیہ کی پالیسی، جس کے مطابق قومی آمدنی کے 0.7 فیصد کو بین الاقوامی امداد پر خرچ کیا جائے-
ڈیلی میل نے وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے احتساب شہزاد اکبر کا حوالہ دیتے ہوئے کہا تھا کہ حکومت پاکستان نے منی لانڈرنگ سے متعلق تمام شواہد جمع کر لیے ہیں، زیادہ تر منی لانڈرنگ برطانیہ میں ہوئی۔ رپورٹ کے مطابق شہزاد اکبر کا یہ بھی کہنا تھا کہ ‘ہم نیشنل کرائم ایجنسی اور وزارت داخلہ کے ساتھ مل کر کام کر رہے ہیں، ہم اس تعاون کے شکرگزار ہیں اور ہم امید کرتے ہیں کہ یہ ہمیں مستقبل میں منی لانڈرنگ نہ ہونے کی یقین دہانی کروائے گا۔

یہ خبر پڑھیئے

یوکرین کی صورتحال پر سلامتی کونسل کا اجلاس

مقامی وقت کے مطابق 8 تاریخ کو اقوام متحدہ میں روس کے مستقل مشن کی …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons