تازہ ترین

⁠⁠⁠⁠⁠⁠⁠پہلی تین سہ ماہیوں میں چین کی قابل تجدید توانائی کی نئی صلاحیت 172 ملین کلوواٹ تک پہنچ گئی

چین کے قومی محکمہ توانائی نے 30 تاریخ کو ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ چین کی نصب شدہ قابل تجدید توانائی کی صلاحیت میں اضافے کا سلسلہ جاری ہے۔ 

سال 2023 کی پہلی تین سہ ماہیوں میں، ملک بھر میں 172 ملین کلوواٹ  قابل تجدید توانائی کی نئی صلاحیت نصب کی گئی ہے، جو سال بہ سال 93 فیصد کا اضافہ ہے اور نئی نصب شدہ صلاحیت کا 76فیصد بنتی ہے۔ ستمبر 2023 کے اختتام تک، ملک کی قابل تجدید توانائی کی صلاحیت تقریباً 1.384 بلین کلو واٹ ہے، جو سال بہ سال 20فیصد کا اضافہ ہے اور یہ چین کی کل نصب شدہ صلاحیت کا تقریبا 49.6 فیصد بنتی ہے بلکہ تھرمل پاور کی نصب شدہ صلاحیت سے تجاوز کر گئی ہے۔

اس کے ساتھ ہی قابل تجدید توانائی سے پیدا ہونے والی بجلی کی مقدار میں مسلسل اضافہ دیکھنے میں آیا ہے۔ سال 2023 کی پہلی تین سہ ماہیوں میں ملک کی قابل تجدید توانائی سے پیدا ہونے والی بجلی کی مقدار 2.07 ٹریلین کلو واٹ تک پہنچ گئی، جو بجلی کی کل پیداوار کا تقریباً 31.3 فیصد ہے۔

ان میں پون بجلی اور فوٹو وولٹک بجلی کی پیداوار میں سال بہ سال 22.3 فیصد کا اضافہ ہوا، جو اسی عرصے میں شہری اور دیہی رہائشیوں کی گھریلو بجلی کی کھپت سے زیادہ ہے۔

یہ خبر پڑھیئے

وزارت خارجہ نے 24 ویں چین-یورپی یونین سربراہ اجلاس کے بارے میں بریفنگ دی

 8 دسمبر کو چین کی  وزارت خارجہ کے ترجمان وانگ وین بین نے 24 ویں …

Show Buttons
Hide Buttons